مکتب تشیع کے ساتھ زیادتیوں پر بیرون ملک پاکستانیوں کی تشویش: عزاداروں کی پاکستانی سفارتخانہ لندن میں احتجاجی قرارداد

ولایت نیوز شیئر کریں

لندن (ولایت نیوز ) پاکستان میں مکتبِ تشیع کے خلاف متعصبانہ اقدامات اور حقوق کی پامالیوں کے حوالے سے برطانیہ میں مقیم پاکستانیوں کی تشویش اور بے چینی سے آگاہ کرنے کیلئے تحریک نفاذ فقہ جعفریہ برطانیہ کے وفد نے لندن میں پاکستانی سفارتخانے کے عہدیداران سے ملاقات کی ۔

ٹی این ایف جے یو کے کے صدر ڈاکٹر ایس زیڈ نقوی وفد کی قیادت کررہے تھے ان کے ہمراہ بزم ماتمیان پنجاب کے راجہ ظہور عباس، انجمن شباب المومنین کے شیخ اعجاز ، تنظیم ِ ولایت علیؑ ایسٹ لندن کے ثاقب حسین بھی موجود تھے۔ شرکائے وفد نے مکتب تشیع کے مسائل پر مبنی احتجاجی قرارداد پیش کی۔

اس موقع پر ڈاکٹر ایس زیڈ نقوی کے ملاقات میں ٹی این ایف جے کے وفد نے پاکستان میں اہل تشیع کی مذہبی عبادات بالخصوص عزاداری کو پابندیوں کا نشانہ بنانے، متنازعہ قانون سازی کے ذریعے فقہ جعفریہ میں مداخلت، متعصبانہ نصاب کا اجراء اور کالعدم تکفیری عناصر کو حاصل آزادی جبکہ بیگناہ عزاداروں پر مقدمات اور شیڈول فور کی بندشوں کے حوالے سے برطانیہ میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کو لاحق تشویش سے آگاہ کیا اور بتا یا کہ برطانیہ میں 25 رجب کو منعقد ہونیوالے شہادت ِامام موسیٰ کاظم ؑ کے مجالس و جلوسوں میں بھی ماتمی تنظیموں اور علماء و ذاکرین کی جانب سے پاکستان میں شیعہ عبادات و عقائد پر پابندیوں کے خلاف آوازِ احتجاج بلند کی جائیگی۔

پاکستانی سفارتخانے کے حکام کی جانب سے ٹی این ایف جے وفد کو یقین دلایا گیا کہ ا انکے پیش کردہ تحفظات سے پاکستان میں متعلقہ حکام کو مطلع کیا جائے گا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.