عالمی امن کے ٹھیکیدار مسلم مسائل پر منافقت کا شکار ہیں؛اوآئی سی مردہ ڈھانچہ ہے، آغا حامد موسوی

ولایت نیوز شیئر کریں

حرمین شریفین کوبچانے اورمقامات مقدسہ کی عظمت رفتہ بحال کرانے کیلئے 8شوال کو عالمگیر یوم انہدام جنت لبقیع منائیں گے، جنت البقیع کمیٹی کے عہدیداران سے خطاب

اسلام آباد (ولایت نیوز) سپریم شیعہ علماء بورڈکے سرپرست اعلی و تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے سربراہ آغا سید حامد علی شا ہ موسوی نے کہا ہے کہ عالمی امن کے ٹھیکیدار مسلم مسائل پر منافقت کا شکار ہیں مشرقی تیمور سوڈان سکاٹ لینڈ کی طرح کشمیر و فلسطین کے عوام کو بھی استصواب رائے کا حق دلوایا جائے ، اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کمیشن کی رپورٹ بھارتی جرائم کی چارج شیٹ ہے کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیوں پر عالمی تحقیقاتی کمیشن تشکیل دیا جائے، اقوام متحدہ اگر کشمیر و فلسطین کی قراردادوں پر عمل کرتا توکبھی بے گناہوں کا خون نہ بہتا، کشمیر و فلسطین کے دیرینہ مسلم مسائل سے توجہ ہٹانے کیلئے استعماری لیبارٹریوں اور فارموں میں دہشت گردی کی تخلیق اور افزائش کی گئی ، اوآئی سی ایک مردہ ڈھانچہ ہے جو دنیا کے باوسائل ترین ادارہ ہونے کے بوجود ویٹو پاور حاصل نہ کرسکاجس کی عدم توجہی کی وجہ سے عالم اسلام دن بدن مزید مسائل میں گھرتا چلا جا رہا ہے،حرمین شریفین کوبچانے اورمقامات مقدسہ کی عظمت رفتہ بحال کرانے کیلئے 8شوال کو عالمگیر یوم انہدام جنت لبقیع منائیں گے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں حاجی غلام مرتضی چوہان کی قیادت میں ٹی این ایف جے کی عالمگیر جنت البقیع کمیٹی کے عہدیداران سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

دنیا بھر میں یوم انہدام جنت البقیع کی تیاریاں عروج پر پہنچ گئیں

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ کشمیر و فلسطین 70سال سے آگ اور خون کا کھیل جار ی ہے جب تک یہ مسائل حل نہیں ہوں گے مشرق وسطی اور جنوبی ایشیامسائل ومصائب کا شکار رہیں گے ، دونوں مسائل استعماری قوتوں کے پیدا کردہ ہیں ہر بے گناہ کا خون ان کی گردن پر ہے ۔انہوں نے کہا کہ 1948میں بھارت خود مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ میں لے کر گیا یو این نے تاخیری حربے استعمال کرکے بھارتی قبضے کو دوام بخشااقووام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق کشمیریوں فلسطینیوں کو حق خود ارادیت دینا بھارت و اسرائیل کی ذمہ داری ہے ۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ مشرقی تیمور جنوبی سوڈان میں عالم اسلام کے آبادی و رقبے کے لحاظ سے سب سے بڑے ممالک کو توڑ کر عیسائی آبادی کو حق خودارادیت دلوایا گیا،سکاٹ لینڈ یو کرین میں عوام کو ان کا بنیادی حق دلوایا گیالیکن فلسطینیوں کشمیریوں کو ان کے بنیادی حقوق سے محروم رکھا گیا ہے ، پون صدی سے اسرائیلیوں بھارتیوں نے کشمیریوں فلسطینیوں پر عرصہ حیات تنگ کررکھاہے ۔

انہوں نے کہا کہ جب سے ٹرمپ نے مقبوضہ بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کیاہے صیہونی مظالم میں مزید اضافہ ہوگیا ہے سینکڑوں فلسطینی شہیداور ہزاروں زخمی موت و حیات کی کشمکش میں مبتلا ہیں کشمیر و فلسطین کے مسائل سے توجہ ہٹانے کیلئے بھارت و اسرائیل کشمیر و فلسطین میں بد امنی پھیلا رہے ہیں تمام عرب ممالک میں دہشت گردی کی لہر کے پیچھے اسرائیل اور افغانستان میں دہشت گردی کے پیچھے بھارت ہے ، افغانستان میں دہشت گردی کی افزائش کرکے بھارت پاکستا ن کو ٹارگٹ کر رہا ہے ٹی ٹی پی کے سربراہ کے افغانستان میں مارے جانے سے افغان سرزمین پاکستان کے خلاف استعمال ہونے کے پاکستانی موقف کی تصدیق ہو گئی ہے ۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں گزشتہ 28 سالوں سے آرمڈ فورسز خصوصی ایکٹ نافذ ہے، اس قانون کے باعث اب تک کسی ایک بھی بھارتی فوجی پر انسانی حقوق کی خلاف ورزی کامقدمہ نہیں چل سکا لہذا اس قانون کا خاتمہ کیا جائے ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.