حرمت سادات کی پامالی شان رسالتؐ میں اہانت ہے،چیف جسٹس آرٹیکل 227 کی متواتر پامالی کا نوٹس لیں، قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد موسوی

ولایت نیوز شیئر کریں

چیف جسٹس آئین کے آرٹیکل 227 کی متواتر پامالی کا نوٹس لیں، قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد موسوی
گزشتہ دور میں فیملی لاز ترمیمی بل کی منظور کروا کے پرسنل لاز کی پامالی کے مکروہ سلسلے کی بنیاد رکھی گئی
یکساں نصاب اور فیملی لاز بل میں فقہ اہلبیت ؑ پر سودا بازی کرنے والوں کو قوم کبھی معاف نہیں کرے گی
توہین رسالتؐ پر مودی کی خاموشی گستاخوں کے ساتھ یکجہتی ہے، بھارت کے ساتھ دوستی کے دیوانے ہوش کے ناخن لیں
تمام مسالک شادی میں کفو کے قائل ہیں، حرمت سادات پامال کرنا شان رسالت ؐ میں اہانت کے مترادف ہے
اللہ کے قوانین انسان مسخ کرتے رہے تو قہر کا موجب بنتے رہیں گے، ذکر حسینؑ و فکر حسین ؑ کو عام کرنا وقت کی اہم ترین ضرورت ہے
اسلامی تعلیمات سے پسپائی امت مسلمہ کی رسوائی کا سبب ہے امام رضا ؑ نے ہر مذہب سے اسلام کی حقانیت تسلیم کر وائی، محفل امام ضامن سے خطاب
امام علی ابن موسی الرضا کا یوم ولادت پرنور عقیدت و احترام کے ساتھ منایا گیا، ملکی سلامتی، معاشی استحکام اور عالم اسلام کی یکجہتی کیلئے خصوصی دعائیں

اسلام آباد( ولایت نیوز)سپریم شیعہ علماء بورڈ کے سرپرست اعلیٰ قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا ہے کہ چیف جسٹس آئین کے آرٹیکل 227 کی متواتر پامالی کا نوٹس لیں، گزشتہ دور حکومت میں فیملی لاز ترمیمی بل کی منظور کروا کے پرسنل لاز کی پامالی کے مکروہ سلسلے کی بنیاد رکھی گئی،یکساں نصاب اور فیملی لاز بل میں فقہ اہلبیتؑ پر سودا بازی کرنے والوں کو قوم کبھی معاف نہیں کرے گی

توہین رسالت ص پر مودی کی خاموشی گستاخوں کے ساتھ یکجہتی کا اعلان ہے، بھارت کے ساتھ دوستی کے دیوانے مسلم حکمران ہوش کے ناخن لیں ،تمام مسالک شادی میں کفو کے قائل ہیں، کفو نظر انداز کرتے ہوئے حرمت سادات پامال کرنا شان رسالت ؐ میں اہانت کے مترادف ہے، اللہ کے بنائے قوانین انسان مسخ کرتے رہے تو اللہ کے قہر کا موجب بنتے رہیں گے، اسلام پر حملوں کا جواب امام رضا ؑ کی سیرت میں مضمر ہے،اسلامی تعلیمات سے پسپائی امت مسلمہ کی رسوائی کا سبب ہے امام رضا ؑ نے ہر مذہب کے علماٗ سے اسلام کی حقانیت تسلیم کر وائی اور عالم آل محمد کہلائے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ولادت پرنور وارث علم مصطفی حضرت امام علی ابن موسی الرضا علیہ السلام کی مناسبت سے محفل امام ضامن ؑ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ امام علی ابن موسی الرضا علم نبی ؐ کا سرچشمہ و منبع تھے تمام مذاہب مسالک کے علماء مورخین محققین نے تسلیم کیا کہ ان کے زمانے میں روئے زمین پر کوئی ان کا ہمسر نہ تھا، امام علی رضا ؑ کا علم کسی دنیاوی درس گاہ کی کرامت نہ تھی بلکہ علم محمد مصطفی ؐ کی امانت کا مظہر تھا۔

انہوں نے کہا کہ امام علی رضا ؑ کی روایت کردہ حدیث سلسلۃ الذہب میں واضھ ہے کہ اسلام کی بنیاد توحیدی جہاں بینی پر استوار ہے اور کلمہ لا الہ (کلمہ توحید)ایک مضبوط و مستحکم الہی قلعہ ہے جو افراد اس قلعہ میں داخل ہوگئے وہ عذاب الہی سے نجات پائیں گے“پھر امام نے مزید ارشاد فرمایا کہ عذاب الہی سے نجات کی کچھ شروط ہیں ہم اہلبیت رسول ان شرائط میں ایک ہیں۔گویا اللہ کی رحمت اور تحفظ کا حقدار وہی قا ر پائے گا جو اہلبیت رسول سے تمسک رکھے گا۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ امام علی ابن موسی الرضا نے حدیث سلسلۃ الذہب میں امت مسلمہ کو سرخروئی، نجات، آفات و بیماریوں بلاآن و استعماروں سے تحفظ کا راز بتلاد یااس حوالے سے معروف اہلسنت عالم علامہ ابن حجر مکی تحریر فرماتے ہیں کہ اس حدیث کو لکھنے والوں کی تعداد 20ہزار سے زائد تھی۔ امام احمدبن حنبل کا قول ہے کہ اس حدیث سلسلۃ الذہب کی اسناد کو کسی مجنون پر دم کردیں تو اس کا جنون جاتا رہے اور وہ شفایاب ہو جائے گا۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ امام علی ابن موسی رضا ؑ ذکر شہادت حسین ؑ کیلئے عزاداری کی خصوصی مجالس کاانعقاد کرتے اور تمام پیروکاروں کو بھی اس ذکر کی تاکید کرتے امام کی سیرت پر عمل کرتے ہوئے ذکر حسینؑ و فکر حسین ؑ کو عام کرنا وقت کی اہم ترین ضرورت ہے کیونکہ یہی ذکر اور فکر آج بھی کشمیر و فلسطین سمیت دنیا بھر کے مظلوموں محروموں کے جو ش و ولولے کا باعث ہے۔

درایں اثنا تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کی ایام ضامن کمیٹی کے دفتر میں آمدہ اطلاعات کے مطابق ملک بھر میں امام رضا علیہ السلام کا یوم ولادت پرنور عقیدت و احترام کے ساتھ منایا گیا، مساجد امام بارگاہوں اولیاء ے کرام کی درگاہوں مزارات پر جشن امام ضامن کی تقاریب منعقد ہوئیں چراغاں کیا گیا اس موقع پر ملک کی سلامتی، معاشی و دفاعی استحکام اور عالم اسلام کی یکجہتی کیلئے خصوصی دعائیں کی گئیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.