قتل حسین ؑ کا فتوی دینے والے کوہیرو بنانا قوم کی رگوں میں زہر بھرنا ہے،تعصب کی ملاوٹ سے نصاب نہیں عذاب تیار ہوتے ہیں، قائد ملت جعفریہ آغا حامد موسوی

ولایت نیوز شیئر کریں

توہین رسالتؐ و قرآن شیطانی حربے ہیں، شعب ابی طالبؑ و کربلا کا جذبہ بیدار کرنا ہوگا، قائد ملت جعفریہ آغا حامد موسوی
31مئی کو ملک بھر میں ’یوم نگہبانی رسالتؐ‘ منائیں گے،حکومتیں جان لیں تعصب کی ملاوٹ سے نصاب نہیں عذاب تیار ہوتے ہیں
یکساں نصاب میں قتل حسین ؑ کا فتوی صادر کرنے والوں کو ہیرو بناکر پیش کرنا دین سے خیانت اور قوم کی رگوں میں زہر بھرنے کے مترادف ہے
نسلوں کو بچانا ہے تو انہیں ر اسلام کے محسنوں کے پاکیزہ کردار سے روشناس کرانا ہوگا، کشمیر و فلسطین کی آزادی کی تحریکوں کی روح حسینیت ہے
مصطفوی ؐریاست تک رسائی کیلئے مدینہ کے ابواب نجف کربلا سامرا کاظمین قم و مشہد سے رجوع کرنا ہوگا،نفرت تشدد انتہا پسندی اسلام کی ضد ہیں
یکساں نصاب بچوں کا دماغ خراب کرنے کیلئے رائج کیا گیا شیعہ دینیات بحال کی جائے، راہ ابو طالب ؑو حسین ؑ پر گامزن رہیں گے، جعفریہ ایکشن کمیٹی سے خطاب
31مئی کوشان ابوطالب ؑ اور 18جیٹھ شہدائے کربلا کی یاد میں مجالس وجلوس منعقد ہوں گی، پاکستان کی سلامتی و استحکام کیلئے دعاؤں کی اپیل

اسلام آباد( ولایت نیوز)سپریم شیعہ علماء بورڈ کے سرپرست اعلی قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا ہے کہ توہین رسالتؐ اور توہین قرآن کے واقعات اسلام کی آفاقیت و پھیلاؤ روکنے کے شیطانی حربے ہیں جنہیں ناکام بنانے کیلئے شعب ابی طالب و کربلا کا جذبہ بیدار کرنا ہوگا، زندہ قوموں کی تعمیر میں نصاب کا کردار نمایاں ترین ہے حکومتیں جان لیں تعصب کی ملاوٹ سے نصاب نہیں عذاب تیار ہوتے ہیں گذشتہ حکومت کے تیار کردہ یکساں نصاب میں قتل حسین ؑ کا فتوی صادر کرنے والوں کو ہیرو بناکر پیش کرنا دین سے خیانت اور قوم کی رگوں میں زہر بھرنے کے مترادف ہے ، آئندہ نسلوں کو بچانا ہے تو انہیں اسلام کے محسن رفقائے رسالتؐ، اہلبیت اطہارؑ، پاکیزہ صحابہ کبارؓ کے کردار سے روشناس کرانا ہوگا،اسلام کے پیغام میں تحریف کی ہر سازش کو حسینیت کا دم بھرنے والوں نے ناکام کیا، نفرت تشدد انتہا پسندی اسلام کی ضد ہیں حقیقی مصطفویؐ ریاست تک رسائی کیلئے مدینہ کے ابواب نجف کربلا سامرا کاظمین قم و مشہد سے رجوع کرنا ہوگا، کشمیر و فلسطین کی آزادی کی تحریکوں کی روح حضرت امام حسین ابن علی ابن ابو طالب ؑ کا بخشا ہوا درس حریت ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کی جعفریہ ایکشن کمیٹی سے خطاب کرتے ہوئے کیا،

اس موقع پر انہوں نے 29شوال 31مئی کو ملک بھر میں ’یوم نگہبانی رسالتؐ‘ منانے کا اعلان کیا اور اس موقع پرشان ابوطالب ؑ اور 18جیٹھ کی مناسبت سے شہدائے کربلا کی یاد میں مجالس وجلوس میں پاکستان کی سلامتی و استحکام کیلئے دعاﷺن کی اپیل کی۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہبعثت مصطفوی بنی نوع انسان پر اللہ کا سب سے بڑا احسا ن ہے پیغام مصطفوی کے خلاف ہر دور میں بو لہبی و بو جہلی قوتیں سرگرم عمل رہیں جنہیں ناکام بنانے کیلئے قدرت نے حضرت ابوطالب ؑ اور ان کی اولاد کو منتخب کیا رسول کریم کے بچپنے سے دعوت ذوی العشیرہ اور شعب ابی طالب سے کربلا تک حضرت ابو طالب کی جانثار ی اور تربیت اسلام کی مدافعت کیلئے سینہ سپر رہی ،جس کی محافظت کیلئے حضرت ابو طالب ؑ اور ان کی اولاد جو قربانیاں پیش کیں اس پر بنی نوع انسان ہمیشہ نازاں رہے گی۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ عصبیتوں سے بھرپور یکساں نصاب بچوں کا دماغ خراب کرنے کیلئے رائج کیا گیا اگر سکول کی سطح سے بچوں میں تفرقہ ڈال دیا گیا تو اس کے تباہ کن نتائج نکلیں گے حکومت یکساں نصاب کے نام پر مسلط کردہ تفرقے باز ایجنڈے کو ختم کرنے کیلئے پہلی سے پانچویں جماعت تک کی کتب فوری منسوخ کرے بصورت دیگر شیعہ دینیات کو بحال کیا جائے۔آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ راہ ابو طالب ؑو حسین ؑ پر چلتے ہوئے دین کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.