انتہاپسندی قائد اعظم کے پاکستان پرحملہ آور ہے، ہر قربانی دے کر وطن کو انتشار سے بچائیں گے، آغا حامد موسوی

ولایت نیوز شیئر کریں

انتہاپسندی قائد اعظم کے پاکستان پرپوری شدت سے حملہ آور ہے، ہر قربانی دے کر وطن کو انتشار سے بچائیں گے، آغا حامد موسوی
تفرقے کی آگ لگانے والے بھول کا شکار ہیں،بیرونی پیسوں پر پلنے والوں کو کبھی کامیاب نہیں ہونے دیں گے
شیعہ سنی یکجہتی میں اولیائے کرام کی تعلیمات رچی بسی ہیں، تکفیری فتوے کبھی بھٹائیؒ قلندر ؒبری ؒداتاؒ اور سچل ؒکے پیغام پرغالب نہیں آسکتے
اگر قائد اعظم کی تعلیمات پر عمل ہوتا تو نائن الیون ڈرامے کا خمیازہ پاکستان کو نہ بھگتنا پڑتا، حکومت نیشنل ایکشن پلان پر عمل کروائے
امام حسین ؑ کے غم پر کسی کا اجارہ نہیں رسول ؐ کاہر عاشق ووفادارشہدائے کربلا کا عزادار ہے، عشرہ بیمار کربلا کمیٹی کے عہدیداران سے قائد ملت جعفریہ کا خطاب

اسلام آباد(ولایت نیوز)سپریم شیعہ علماء بورڈ کے سرپرست اعلی قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا ہے کہ انتہاپسندی قائد اعظم اور علامہ اقبال کے پاکستان پرپوری شدت سے حملہ آور ہے، ہر قربانی دے کر پاکستان کو انتشار سے بچائیں گے تفرقے کی آگ لگانے والے بھول کا شکار ہیں کانگریسی فکر ایک بار پھر منہ کی کھائیگی بیرونی پیسوں پر پلنے والوں کو کبھی کامیاب نہیں ہونے دیں گے، پاکستان کی شیعہ سنی یکجہتی کی بنیادوں میں اولیائے کرام کی تعلیمات رچی بسی ہیں، تکفیری فتوے کبھی بھٹائیؒ قلندر ؒبری شاہ لطیف ؒداتاؒ اور سچلؒ کے پیغا م پر غالب نہیں آسکتے، حکومت نیشنل ایکشن پلان پر عمل کروائے، اگر قائد اعظم کی تعلیمات پر عمل ہوتا تو نائن الیون ڈرامے کا خمیازہ پاکستان کو نہ بھگتنا پڑتا، نواسہ رسول ؐ امام حسین ؑ کے غم پر کسی مکتب مسلک کا اجارہ نہیں سرور کائنات ؐ کا ہر عاشق ووفادارشہدائے کربلا کا عزادار ہے۔ ا ن خیالات کا اظہار انہوں نے عشرہ بیمار کربلا کمیٹی کے عہدیداران سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ قائد اعظم کی رحلت کے بعد وطن عزیز مفادپر ستوں کے ہاتھ نہ چڑھتا تو وطن عزیز امت مسلمہ ہی نہیں اقوام عالم کی قیادت کررہا ہوتا،بدقسمتی سے دیگر ممالک کی جنگین پاکستانی سرزمین پر لڑنے کیلئے گزشتہ چار دہائیوں میں اربوں کھربوں خرچ کئے گئے سوشل میڈیا پر تفرقے کا تلاطم بھی بیرونی قوتوں کے نہ رکنے والے مال و زر کا نتیجہ ہے۔انہوں نے کہا کہ جو قوتیں پاکستان کے قیام کو روکنے کیلئے انگریزوں اور ہندوؤں کی ہمنوا تھیں آج وہ ایک بار پھر پوری شدت کے ساتھ پاکستان کے نظریے، یکجہتی اور استحکام پر حملہ آور ہیں فساد کی آگ بھڑکانے والوں کے پیچھے وہی عناصر کارفرما ہیں جنہوں نے پاکستان کو کئی عشروں تک دہشت گردی کا اکھاڑہ بنائے رکھا لیکن پاکستان کے عوام کی قربانیوں دانشمندی اور دوراندیشی نے پاکستان کو لبنان شام لیبیا بننے سے بچالیا۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ تحریک نفاذ فقہ جعفریہ نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں ناقابل فراموش قربانیاں دیں ہمارے روحانی فرزندوں کو گولیوں سے بھونا جاتا رہا خودکش دھماکوں کا نشانہ بنایا گیالیکن ہم نے کسی بھی شیعہ سنی لڑائی کے تاثر کی نفی کی کیونکہ پاکستان میں ایسا ممکن ہی نہیں اور نہ ہم ہونے دیں گے دشمن یہ جان لے کہ ہم نے پہلے بھی تمام مصائب و الم برداشت کرکے پاکستان کے نظریے کو بچایا تھا آئندہ بھی بچائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ قائد اعظم محمد علی جناح آئین اور قانون کی بالادستی کے خواہاں تھے اور ان کی زندگی کا ایک ایک لمحہ اس حقیقت کا آئنہ دار ہے، قائد اعظم کے بعد آئین اور قانون کو مفاد پرست سیاستدانوں کے تابع بنانے کی کوشش کی گئی، بار بار آئین کو توڑا گیا جس سے ملک دولخت ہوگیا لیکن دشمن پاکستان کو نظریہ دولخت کرنے میں ناکام رہا بھارت میں مودی کی جانب سے کئے جانے والے اقدامات نے پاکستان کے نظریے اور اس کے بانیان کی صداقت کو پھر روشن کردیا ہے اور پاکستان دشمنوں کے کے نظریات اور کردار کی کراہت کو دنیا پر آشکار کردیا ہے۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ حکمرانوں سیاستدانوں کو بالخصوص اور عوام الناس کو بالعموم یہ ادراک کرنا ہوگا کہ ازلی دشمن بھارت اپنے سیاہ کرتوتوں پر پردہ ڈالنے کیلئے پاکستان کو تنگ نظر ریاست کے طور پر پیش کرنا چاہتا ہے اسی لئے مسالک مکاتب صوبوں کولڑاناچاہتا ہے اس سازش کو ناکام بنانے کیلئے ہر فرد کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.