کربلا میں عزائے ام البنینؑ؛ جنت ارضی کے درو دیوار وفاؤں کے سلطان کی پالن ہار کی شہادت پر نوحہ کناں

ولایت نیوز شیئر کریں

کربلائے معلی (ولایت نیوز ) سیدۃ الوفاء مادرحضرت عباس علمدارؑ حضرت ام البنین (سلام اللہ علیہا) کے یوم شہادت کے موقع پر کربلائے معلی حزن و ملال میں ڈوبا نظر آیا ۔ دنیا بھر سے لاکھوں عزادار کربلا کی ذاکر اور نوحہ خواں بی بی کی وفا کو خراج پیش کرنے کربلا پہنچے۔ سوگ کے اظہار کے لیے مقدس عتبات میں سیاہ پرچم اور سیاہ چادریں ہر جانب آویزاں کئے گئے تھے۔

اس موقع پر روضہ امام حسین ؑ و حضرت عباس علمدار ؑ کی جانب سے خصوصی پروگراموں کا انعقاد کیا گیا ۔

حضرت عباس علمدار ؑ کے روضہ پر دنیائے عرب کے عظیم نوحہ خواں باسم الکربلائی کے ماتمی نوحوں پر کربلا کے درو دیوار بھی ماتم میں مصروف نظر آئے ۔

شعبہ خطابت حسینی کی طرف سے صحن مبارک حضرت عباس ؑ میں صبح وشام تین روزہ مجالس عزاء کا انعقاد کیا گیا۔ صبح کے وقت برپا ہونے والی مجلس عزاء سے شیخ ہادی زنجیل جبکہ شام کی مجلس سے ذاکر سید نصرت قشاقش نے خطاب کیا اور اپنے مخصوص انداز میں ذکر فضا ئل و مصائب بیان کئے ۔

روضہ مبارک کے صحن میں موجود سرداب میں خواتین کی مجالس عزاء کا انعقاد کیا گیا۔

روضہ ہائے قدسیہ کے خدام کی جانب سے نکالے گئے جلوس عزا کا پر شکوہ انداز دلون میں غم کا طوفان برپا کررہا تھا۔

حضرت ام البنین ؑ کی شہادت مے موقع پر خصوصی لنگر اور نیاز کا بھی اہتمام کیا گیا تھا۔

روضہ مبارک حضرت عباس علیہ السلام میں شعبہ فکرو ثقافت کی جانب سے عالمی الجود شعری مقابلے کے ساتواں ایڈیشن کا انعقاد ہوا۔ جس میں عراق اور بیرون ملک سے (70) سے زیادہ عرب شعراء نے حضرت عباس(علیہ السلام) کی شان میں منظوم نذرانہ عقیدت ارسال کئے ۔

حضرت ام البنین ؑ کے غم میں کربلا کے مقدس روضے گریہ کناں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.