کشمیریو! فتح تمہارا مقدر ہے ؛ نیشنل پریس کلب کے سامنے مختار سٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی یکجہتی کشمیرریلی

ولایت نیوز شیئر کریں

نیشنل پریس کلب کے سامنے مختار سٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی یکجہتی کشمیرریلی،حمایت مظلومین جاری رکھنے کا عزم  
مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کا بھارتی مکارانہ اقدام عالمی اداروں کے منہ پر طمانچہ ہے،مسئلہ کشمیر فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہوچکا ہے
راہ حسین ؑ پر گامزن مظلومین کشمیر آزادی کی منزل کے قریب ہیں،کربلا آزادی و حریت کا سرچشمہ ہے۔علامہ راجہ بشارت امامی،محمد علی بنگش

 اسلام آباد( ولایت نیوز)قائد ملت جعفریہ آغاسیدحامدعلی شاہ موسوی کے اعلان کے مطابق جمعہ 5فروری کویوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر ملک کے دیگر شہروں کی طرح وفاقی دارالحکومت اسلام آبا د میں بھی کشمیریوں کی تحریک حریت و آزادی کے ساتھ اظہار یکجہتی کیلئے پرامن احتجاجی مظاہرے ہوئے اوریکجہتی کشمیر ریلیوں کا انعقاد کیا گیا۔

مختاراسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کے زیراہتمام نیشنل پریس کلب کے سامنے ریلی کی قیادت صدر ٹی این ایف جے فیڈرل کیپٹل علامہ راجہ بشارت حسین امامی،چیئرمین مختار ایس او سید محمد عباس کاظمی،مرکزی صدر مختارایس او محمد علی بنگش،سینئر نائب صدر محمد علی نقوی،جنرل سیکرٹری سید علی نقی،مرکزی صدر مختار آرگنائزیشن پروفیسر ثمر نقوی،علامہ زاہدعبا س کاظمی،علامہ ملک تیمور الحسن قمی، علامہ مثیم گردیزی،ذوالفقار علی راجہ،پروفیسرغلام عباس حیدری، تبیان زیدی،شفقت ترابی اور دیگر عمائدین نے کی۔

اس موقع پر شرکائے ریلی سے خطاب کرتے ہوئے علامہ بشارت حسین امامی کا کہنا تھا کہ کربلا آزادی وحریت کا سرچشمہ ہے وہ دن دور نہیں جب مظلومین کشمیر راہِ حسین ؑ ابن علی ؑ پر چلتے ہوئے آزاد ی کی منزل سے سرفراز ہوں گے۔انہوں نے واضح کیا کہ مسئلہ کشمیر کا واحد حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق استصواب رائے ہے،اسکے علاوہ کسی بھی فارمولے یا پلان کو منظور کرنا کشمیر ی و پاکستانی شہداء کے لہو سے غداری ہوگی۔

علامہ تصور نقوی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے یہی وجہ ہے کہ اس جنت ارضی کے حصول کیلئے صرف کشمیریوں ہی کا خون نہیں بہابلکہ افواج پاکستان نے تین سے زائد جنگیں لڑی ہیں اور پاکستانی عوام کو اسی کاز سے پاسداری کی پاداش میں آج تک دہشت گردی اور بھارتی ریشہ دوانیوں کا سامنا ہے۔انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کا بھارتی مکارانہ اقدام عالمی اداروں کے منہ پر طمانچہ ہے،مسئلہ کشمیر فیصلہ کن مرحلے میں داخل ہوچکا ہے۔انہوں نے کہا کہ شہداء کے لہو اور مجاہدین حریت کی قربانیوں کے طفیل آج آزادی کشمیر کی منزل قریب آن پہنچی ہے،ہندو بنیا کشمیر کو محکوم نہیں رکھ سکتا۔

شرکائے ریلی نے مختار سٹو ڈنٹس آرگنائزیشن کے مرکزی صدر محمد علی بنگش کی جانب سے پیشکردہ قرارداد پرجوش نعروں کی گونج میں منظور کی جس میں واضح کیا گیا کہ کربلائے کشمیر میں بھارتی درندوں کے مظالم انتہا کو پہنچ چکے ہیں مگر عالمی تنظیمیں اور حقوقِ انسانی کے ادارے خاموش تماشائی بنے بیٹھے ہیں اگر ان کے ضمیر جا گ رہے ہوتے تو آج مظلوم کشمیری عوام یوں بے حال اور دربدر نہ ہوتے جو حسرت و یاس کے عالم میں پورے عالم اسلام کی طرف دیکھ رہے ہیں۔قرارداد میں اقوام متحدہ پر زوردیاگیا کہ وہ مسئلہ کشمیر کے بارے میں اپنی قراردادوں پر عملدرآمد کروائے۔ بعدازاں مظاہرین کشمیر کی آزادی تک جنگ رہیگی،جنگ رہیگی،بھار ت کا جو یار ہے وہ قوم کا غدار ہے،افواج پاکستان زندہ باد،دہشتگرد مردہ باد،کشمیر بنے گا پاکستان اور دیگر نعرے لگاتے ہوئے پرامن طور پر منتشر ہوگئے۔اختتام پر علامہ زاہدعباس نے دعا کروائی ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.