عقائد سے متصادم زیارت پالیسی قبول نہیں کریں گے،زر کے پجاری علماء کے سبب عوام دین سے دور ہو ئے،قائد ملت جعفریہ آغا حامد موسوی

ولایت نیوز شیئر کریں

حکومتیں مذہبی جماعتوں کی بیرونی امداد پر خاموش تماشائی نہ بنتیں تو دین اور دیس تباہی سے بچ جاتے،قائد ملت جعفریہ آغا حامد موسوی

زر کے پجاری علماء کے سبب عوام دین سے دور ہو ئے کشمیر میں کلسٹر بموں کے حملے اور خوفناک کھیل کی تیاری ٹرمپ کی ثالثی پیشکش کا نتیجہ ہے

ایران سے ڈرا ڈراکر امریکہ عربوں کا بیڑا غرق کردے گامسلم ممالک ہوش کے ناخن لیں حرمین شریفین کو باہر سے زیادہ اند رسے خطرہ ہے

احتساب پرلگے انتقام کے تاثر کو ختم کیا جائے ورنہ لٹیرے مظلوم بن جائیں گے، آئی ایم ایف کی شرائط کے بجائے شعب ابی طالب ؑ کا جذبہ اپنانا ہوگا

حکمران حق سننا نہیں چاہتے نظریاتی کونسل علماء بورڈزو کمیٹیوں کو چاپلوسوں و کالعدم جماعتوں سے بھر دیا گیا عقائدسے متصادم زیارت پالیسی قبول نہیں کریں گے

ممنوعہ جماعتوں پر پابندی پر صحیح معنوں میں عمل کرایا جائے، محرم سے قبل ضابطہ عزاداری کا اعلان کریں گے، ٹی این ایف جے سپریم کونسل کے اجلاس سے خطاب

اسلام آباد( ولایت نیوز) سپریم شیعہ علماء بور ڈ کے سرپرست اعلی ٰقائد ملت جعفریہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا ہے کہ حکومتیں مذہبی جماعتوں کی بیرونی امداد پر خاموش تماشائی نہ بنتیں تو دین اور دیس دونوں تباہی سے بچ جاتے، درہم و دیناراور ڈالر و ریال کے پجاری علماء کے سبب عوام دین سے دور ہوئے، حکمران حق سننا نہیں چاہتے نظریاتی کونسل علماء بورڈ امن کمیٹیوں کو چاپلوسوں اور کالعدم جماعتوں سے بھر دیا گیاہے، زائرین کے مسائل سے حکومت کو آگاہ کردیا ہے عقائد  سے متصادم اور عبادات میں مزاحم کسی زیارت پالیسی کو قبول نہیں کریں گے، ایران سے ڈرا ڈراکر امریکہ عربوں کا بیڑا غرق کردے گامسلم ممالک ہوش کے ناخن لیں اپنے معاملات غیروں کے ہاتھوں میں نہ دیں، حرمین شریفین کو باہر سے زیادہ اند رسے خطرہ ہے مزارات گرانے والی سوچ کے خاتمے کیلئے اوآئی سی اقدامات کرے، احتساب پرلگے انتقام کے تاثر کو ختم کیا جائے ورنہ لٹیرے مظلوم بن جائیں گے، کشمیر میں کلسٹر بموں کے حملے اور خوفناک کھیل کی تیاری ٹرمپ کی ثالثی پیشکش کا نتیجہ ہے، امریکہ بلوچستان پر قبضہ کرنا چاہتا ہے، اقتصادیات بچانے کیلئے آئی ایم ایف کی شرائط کے بجائے شعب ابی طالب ؑ کا جذبہ اپنانا ہوگا، پیہم جدوجہد سے متشدد جماعتوں پر پابندی لگوائی ممنوعہ جماعتوں پر پابندی پر صحیح معنوں میں عمل کرایا جائے، عزاداری امام حسین ؑ دین و شریعت کی پاسبان اور ہر مظلوم کی ڈھارس ہے محرم سے قبل ضابطہ عزاداری کا اعلان کریں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کی سپریم کونسل کے اجلاس سے صدارتی خطاب کرتے ہوئے کیا۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ مارشل لائی حکومت افغانستان میں مداخلت نہ کرتی توملک کبھی دہشت گردی سے لہو لہان نہ ہوتاامریکی جنگوں نے عالم اسلام کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایاضیاء الحق نے جب دوقومی نظریہ سے انحراف کا اعلان کیا تو نظریاتی اساس کے تحفظ کیلئے سب سے پہلے آواز بلند کی آٹھ مہینے حسینی محاذ ایجی ٹیشن کرکے نانا نبی ؐ اور نواسے حسین ؑ کی عزاداری کے جلوسوں پر پابندی ختم کروائی مارشل لاء حکومت لو اور دو پر معاملات طے کرنے کیلئے وفود بھیجتی رہی ہم نے واضح کیا کہ دین اور وطن کے مفادات پر کوئی لین دین نہیں کرسکتے نہ خود سودابازی کریں گے نہ کسی کو کرنے دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ اللہ رسول ؐاور معصومین ؑ کے سوا کسی کے سامنے سر نہیں جھکایاہماری جدوجہد کا محور دین وطن اور عوام ہیں دین کے تحفظ کیلئے ہم نے خود غربت قبول کی اور زمین پر بیٹھ کر آمروں کو شکست فاش دی، وطن عزیز کی دہشت گردی منافرت اور بیرونی ایجنڈوں کے خلاف آواز نہ اٹھاتے تو پاکستان کا حال شام لیبیا افغانستان سے بدتر ہوتا۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ امریکہ اپنے مفادات کو عزیز سمجھتا ہے ہر ملک میں اس کا اپنا ایجنڈا ہے امریکہ افغانستان سے خیر و عافیت سے نکلنا چاہتا ہے ثالثی کی پیشکشیں اپنے مطلب کیلئے کررہا ہے سی پیک منصوبے کوناکام کرنے کیلئے امریکہ ایڑی چوٹی کا زور لگا رہا ہے بھارت امریکی شہ پر ہی کشمیر میں گھناؤنا کھیل کھیلنے جا رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ امریکہ مسلمانوں سے مسلمانوں کے خلاف کام کروارہا ہے سعودی ولی عہد کا انٹرویو گواہ ہے کہ امریکہ نے ہی دہشت گردی اور انتہا پسندی پر سرمایہ کاری کروائی اورپھر اسی کو بنیاد بنا کر درجنوں مسلم ممالک تباہ کرڈالے جن نفرتوں کی پرورش میں کئی دہائیاں صرف کی گئیں ان کے خاتمے کیلئے طویل جدوجہد کرنا ہوگی 39ملکی اتحاد بھی امریکی ایجنڈے پر بنایا گیا امریکی ایڈوائس پر اتحاد بنانے والے بتائیں کہ اگر یہ اتحاد مسلمانوں کیلئے اور دہشت گردی کے خلاف عمل میں آیا تو فلسطینیوں اور کشمیریوں پر ہونیو الی دہشت گردی کے خاتمہ کیلئے کب اقدام کرے گا؟

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ علماء عوام پر حجت اور معصومین علماء پر حجت ہیں آئمہ نے انہی علماء کی جانب رجوع کرنے کا حکم دیاجو نفس کی حفاظت کرنے والا ہوکبھی کسی گناہ کبیرہ کا مرتکب نہ ہوا ہو، خواہشات کا مخالف، دین کا محافظ اور مولا کا مطیع ہوخواہشات نفس کا پجاری کبھی مجتہد اور مرجع نہیں ہو سکتا امام حسن عسکری کے فرمان کے مطابق وہ عالم و مرجع جو اپنی فوقیت اور برتری کا خواہشمند اور اپنے معتقدین کو دوسروں سے برتر سمجھتا ہو اسے لشکر شیطان سے بدتر کہا گیا، اگر علماء اپنے فرائض پورے کرتے اور خواہشات اور مال و زر کی جانب نہ دوڑتے تو عوام کی بڑی تعداد بے راہ روی سے بچ جاتی،بیرونی پیسے کے چسکے نے علماء سو کو مادیت کا غلام بنا دیا ۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے ہمیشہ مولائے کائنات علی ابن طالب ؑ کا فرمان پیش نظر رکھا کہ تمہارے شہر میں تین چیزوں کے ساتھ داخل ہو رہا ہوں اس سے زیادہ لے کر نکلوں تو سمجھنا کہ خیانت کی ہے، بدقسمتی سے وطن عزیز میں ان لوگوں کو خوب پھلنے پھولنے کے مواقع فراہم کئے گئے جن کے پاس کھانے کو غذا اور پہننے کو لباس تک نہ تھا لیکن دین کی تجارت سے ارب کھرب پتی بن گئے۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ عزاداری امام حسین ؑ محبت ومودت آل رسولؐ کی معراج ہے اورمحبت کی کوئی حدود و قیود نہیں ہوتیں، ولایت اور عزاداری نے ہی ظالموں سے ٹکرانے اور مظلوموں کی حمایت کا سلیقہ سکھایاہم بلا تفریق رنگ و نسل مذہب و مسلک ہر مظلوم کے حامی اور ہر ظالم کے دشمن ہیں بحرین سعودی عرب یمن افغانستان لیبیا نائیجیریا روہنگیا سمیت دنیا کے ہر مظلوم کی تائیدو حمایت جاری رکھیں گے اور ہر ظلم کے ایجنڈے سے انکار کا حسینی ؑ فریضہ ادا کرتے رہیں گے۔

تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کی سپریم کونسل کے اجلاس کے دوسرے سیشن میں ملک بھر سے آئے مندوبین کی آراء کی روشنی میں اہم فیصلے کئے جائیں گے اور آمدہ محرم الحرام کیلئے پالیسی مرتب کی جائے گی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.