ایکشن پلان پر عمل ہو تا تو گوادر سمیت پاکستان میں کہیں دہشت گردی نہ ہوتی،قائد ملت جعفریہ آغا حامد موسوی

ولایت نیوز شیئر کریں

ایکشن پلان پر عمل ہو تا تو گوادر سمیت پاکستان میں کہیں خونریزی و دہشت گردی نہ ہوتی،قائد ملت جعفریہ آغا حامد موسوی

بے گناہ اٹھائے جارہے ہیں کالعدم تنظیموں کے سربراہ دندناتے پھر تے ہیں جو کھلی پاکستان دشمنی اور شہداءکے خون سے بیوفائی ہے

ایران کو دھمکیوں پر مسلم امہ کی خاموشی لمحہ فکریہ ہے آج ایران کی باری تو کل دوسرے بھی تیاری کرلیں ، امریکہ ایک ایک کرکے ماررہا ہے

 امریکہ کو اڈے دینے والے ممالک مسلمانوں نہیں شیطانوں کے خیر خواہ ہیں، ایران اوآئی سی کااجلاس طلب کرے،حکومت امریکہ سے خوفزدہ ہے

مسلم حکمران ام المومنین حضرت خدیجہ ؑکے جذبہ قربانی پر عمل کریں، ٹی این ایف جے عہدیداران سے خطاب ، ایام الحزن منانے کا اعلان

اسلام آباد(ولایت نیوز) سپریم شیعہ علماءبورڈ کے سرپرست اعلی ٰ قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا ہے کہ نیشنل ایکشن پلان پر عمل ہو تا تو گوادر سمیت پاکستان میں کہیں خونریزی و دہشت گردی نہ ہوتی،ہر محب وطن حیران و پریشان ہے کہ بے گناہ لوگ اٹھائے جارہے ہیں جبکہ کالعدم تنظیموں کے سربراہ دندناتے پھر رہے ہیںریلیااں نکال رہے ہیں پریس کانفرنسیں کرتے ہیں غیر ملکی وفود کے عشائیوں عصرانوں میں شریک ہوتے ہیں جو پاکستان اور عوام کے ساتھ کھلی دشمنی اور شہداءکے خون سے بیوفائی ہے

آقائے موسوی نے کہا کہ ایران پر حملے کی امریکی تیاریوں پر مسلم امہ کی خاموشی لمحہ فکریہ ہے مسلم ممالک بھول میں نہ رہیں اگرآج ایران کی باری ہے تو کل دوسرے ممالک بھی تیاری کرلیں ، امریکی دھمکیوں پر ایران اوآئی سی کااجلاس طلب کرے امریکہ مسلم ممالک کو تنہا تنہا کرکے مار رہا ہے او اسرائیل کو محفوظ بناتا چلا جار ہا ہے، پاکستان حکومت امریکہ سے اس قدر خوفزدہ ہے کہ ایران گیس پائپ لائن منصوبے تک سے پیچھے ہٹ چکی ہے جبکہ بھارت کو تمام امریکی پابندیوں سے استثنی حاصل ہے امریکہ کو اڈے دینے والے ممالک مسلمانوں کے نہیں شیطانوں کے خیر خواہ ہیں، مسلم حکمران سیرت ام المومنین حضرت خدیجہ الکبری ؑ پر عمل کریں جنھوں نے اپنا سب کچھ قربان کرکے اسلام کی بنیادیں مضبوط کیں ، 9تا 11رمضان عالمگیر ”ایام الحزن“ منا کر ملیکة العرب حضرت خدیجة الکبری ؑ کی لازوال قربانیوں کو سلام عقیدت پیش کیاجائے گا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے تحریک نفاذ فقہ جعفریہ شعبہ حج و زیارات کے عہدیداران سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

آغا سیدحامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ دنیائے شیطنت کا سرغنہ امریکہ اپنے مفادات کی خاطر جنگ و جدال اور دہشت گردی کی سرگرمیوں میں مصروف چلا آرہا ہے سوویت یونین کو پچھاڑنے کے بعد اس نے عالم اسلام کو نشانے پر رکھ لیا نائن الیوان کا ڈرامہ رچا کر پورے افغانستان کو توارا بورا بنا دیا، عراق کو ایران سے لڑوایا، پھر عراق کو کویت میں گھسایا، دہشت گرد تنظیمیں تخلیق کرکے عراق لیبیا شام پاکستان نائیجیریا مصر سمیت پورے عالم اسلام کو کو خون سے نہلا دیااور نصف درجن ممالک تو مکمل تباہی سے دوچار کر دیئے گئے ، اب امریکہ ایران کو ٹارگٹ کرنے کیلئے اپنا بحری بیڑا لے کر آگیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان گذشتہ 70سال سے امریکہ کے ہاتھوں امریکی دوستی کا خمیازہ بھگت رہا ہے ، حکمران امریکہ کی پاکستان دشمن پالیسیوں سے آگاہی کے باوجود کیوں اس پر واری جارہے ہیں؟امریکی صدر نکسن نے خود اعتراف کیا کہ ہم نے پاکستان کو توڑنے کا مشن بنایاتھابھارت نے 71کی جنگ امریکی سرپرستی میں لڑی اور پاکستان کو دولخت کردیا گیاجبکہ پاکستان امریکہ کے ساتوین بحری بیڑے کا انتطار ہی کرتا رہ گیا، امریکہ نے ہی پاکستان کو افغانستان کے جال میں پھنسایا جس کی سزا پوری قوم 40سال سے بھگت رہی ہے ، امریکہ نے افغانستان میں ڈیرے جما کر جنوبی اور وسطی ایشیا کیلئے خطرات میں اضافہ کردیا ہے ۔

آغاسید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ امریکہ اور اس کے پٹھوو ¿ں کی سازشوں کے سبب ضرب عضب اور ردالفساد کے باوجود دہشت گردی کی کاروائیوں میں اضافہ ہو رہا ہے حالیہ دنوں میں ہزار گنجی کوئٹہ میں غریب محنت کشوں کو ٹارگٹ کیا گیا، اورماڑہ میں بسوں سے اتار کر چن چن کر سیکیورٹی کے جوانوں کو بھون دیا گیا، داتا دربار میں ایلیٹ فورس کے جوانوں کو نشانہ بنایا گیااور گذشتہ روز گوادر ہوٹل میں دہشت گرد حملہ کردیا گیاان تمام واقعات کا مقصد سی پیک منصوبے کو سبوتاژ کرنا ہے جس کی کامیابی کا خوف دشمنوں کو چین نہیں لینے دے رہا۔

انہوں نے کہا کہ اسرائیل اور بھارت کو امریکہ کی مکمل سرپرستی حاصل ہے اسرائیل کی طرح بھارت میں بھی امریکہ جدید فوجی سازو سامان کے انبار لگا رہا ہے تاکہ جنوبی ایشا اور مشرق وسطی میں اس کے بغل بچوں کا تسلط قائم ہو سکے ۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے واضح کیا کہ پاکستان میں امن کے قیام اور دوام کیلئے نیشنل ایکشن پلان کی ہر شق پر عمل کرنا ہوگا اور مسلم ممالک کو اپنی بقاواستحکام کیلئے باہم متحد ہونا ہوگا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.