محسن نقوی نے دشمنان دین وطن کو ترسا دیا۔۔ والعصر نیوز سپیشل

ولایت نیوز شیئر کریں

محسن نقوی کو خون میں نہلانے والے بزدل دہشت گرد آج بھی محسن کے مرنے کی خبر کو ترس رہے ہیں

مرجع اعظم آیۃاللہ العظمی سید محسن الحکیم طباطبائی سے عقیدت نے  غلام عباس کو محسن نقوی بنادیا

محسن نقوی نے سپاسنامہ پڑھتے ہوئے مساجد و امام بارگاہوں کو مقتل بننے سے بچانے کیلئے پوری قوم سے مختار فورس بنانے کی اپیل

حماد اہلبیت محسن نقوی شہید کی برسی پر والعصر نیوز  کی سپیشل رپورٹ

قتل چھپتے تھے کبھی سنگ کی دیوار کے بیچ۔۔۔۔۔۔ اب تو کھلنے لگے مقتل بھرے بازار کے بیچ

حماد اہلبیت شہید محسن نقوی۔15جنوری شاعر مؤدت، شاعری کے چمکتے ہوئے ستارے شہید محسن نقوی کی برسی، جنازے کی ویڈیو پہلی مرتبہ منظر عام پر، زندگی کے وہ پہلو اجاگر جن سے عوام بے خبر تھی۔ خصوصی رپورٹ والعصر نیوزپر۔۔ مزید خبروں کیلئے پیج ضرور لائک کریں۔

Posted by WAL ASR on Tuesday, January 15, 2019

15جنوری 1996کو سادات قبیلے کی روایت نبھاتے ہوئے حماد اہلبیت محسن نقوی شہادت کا سرخ لباس پہن کر ہمیشہ کیلئے امر ہو گئے۔ڈیرہ غازی خان کے چراغ حسین نقوی کا لخت جگر۵مئی 1947کو جب دنیا میں آیا تونام غلام عباس رکھا گیا۔اپنے دور کے عظیم مجتہد مرجع اعظم آیۃاللہ العظمی سید محسن الحکیم طباطبائی سے عقیدت نے اسے محسن نقوی بنادیا۔

عرفان حیدر عابدی نے کیا خوب کہا تھا کہ محسن اقلیم قلم و قرطاس کا مطلق العنان سلطان تھا وہ تخیل کا انیس تبحر کا دبیر شوکت الفاظ کا جوش سوز کا میر تغزل کا غالب فکر کا فیض حافظے کا حافظ حکایات کا سعدی قصائد کا رومی رباعیات کا مونس قطعات کا رئیس تھا۔

محسن نقوی رخت شب کا مسافر بھی تھا وہ ریزہ حرف کا کلیم بھی تھاوہ ردائے خواب کی تعبیر بھی تھاوہ بند قبا کا تقدس بھی تھاوہ موج ادراک سے اشک طلوع کرنے کا کا ہنر ور بھی تھاوہ خیمہ جا ں میں رہافرات فکر سے موج ادراک ارا کر اس دنیا کو اپنے لہو کی سچائی سے یہ بتا گیادنیا کے سب منظر عذاب دید ہیں دید کی عید صرف ماتم حسین ، دید کی معراج مشہد حسین زبان کا وضو نام حسین قلم کی نماز پیام حسین وہ کہتا تھا حسینؑ لکھو حسین ؑ سوچو حسین ؑ سیکھو حسین پڑھو حسینؑ سمجھو ۔وہ زمانے کو بتا تا رہا
حسین نے زندگی بکھیری
فضا سے ورنہ قضا برستی

محسن کا دعوی تھا
جو ہاتھ بھی تھاما ہے، سدا ساتھ رہا ہے،۔۔۔”احباب شناسی” ہمیں ورثے میں ملی ہے
محسن کو قائد ملت جعفریہ آقائے حامد علی شاہ موسوی کے ساتھ محبت و عقیدت اپنے باباچراغ نقوی اور چچا خادم حسین شاہ سے میراث میں ملی ۔ محسن نقوی علی ؑ والا تھا تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے قیام سے لیکر اپنی شہادت تک اپنے مرکز علی مسجدسے مربوط رہا ،انہوں نے ضیاء الحق کے خلاف قائد ملت جعفریہ آقائے موسوی کے حسینی محاذ ایجی ٹیشن کے ہراول دستے کا کردار ادا کیا،  محسن نقوی مختار فورس کو منظم کرنے کیلئے قوم کو جھنجھوڑتے رہے ۔قائد ملت جعفریہ آقائے موسوی نے جب ڈیرہ غازی خان کا دورہ کیا تو محسن نقوی نے سپاسنامہ پڑھتے ہوئے مساجد و امام بارگاہوں کو مقتل بننے سے بچانے کیلئے پوری قوم سے مختار فورس بنانے کی اپیل کرتے ہوئے کہا

پھر کوفہ احساس میں پھیلی ہے بغاوت۔۔۔۔مختار کے جذبہ کو صدا کیوں نہیں دیتے

1985ء ۔۔حسینی محاذ ایجی ٹیشن کے دوران محسن نقوی شہید قائد ملت جعفریہ آقائے حامد موسوی سے ملاقات کررہے ہیں ۔
1985ء ۔۔حسینی محاذ ایجی ٹیشن کے دوران محسن نقوی شہید قائد ملت جعفریہ آقائے حامد موسوی سے ملاقات کررہے ہیں ۔

محسن نقوی نے ضیا الحق کی ڈکٹیٹر شپ کے خلاف بحالی جمہوریت کے محاذ وں کو اپنی شعلہ فشاں تقریروں سے گرمایا، اپنے لفظوں سے منافقت کی تپش سے شکن شکن، شعلہ نمرود سے سینچے گئے بدن والے دہشت گردوں کی ایسی پہچان کرائی کہ وہ نقاب پہن نے پر مجبور ہو گئے ،محمدمصطفی کے دین امن و محبت پر تہمت لگا کردین حق سے بغاوت کرنے والے دہشت گردوں نے15جنوری 1996 کو امن جمہوریت انسانیت کے محسن کو لاتعدا د گولیوں سے بھون دیا۔اور محسن نقوی اپنے لہو کا خراج دے کر مقتل کو سرخرو کرگئے ۔

اور قاتل مرا نشاں مٹانے پہ ہے بضد
میں بھی سناں کی نوک پہ سر چھوڑ جاؤں گا

ناصر باغ لاہور میں محسن نقوی شہید کے جنازے سے خطاب کرتے ہوئے قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے حسینیت سے ٹکرانے والی قوتوں پر واضح کیا تھا کہ میرا روحانی فرزند محسن نقوی ماتمی تھا عزادار تھا حسینیت کا فرمانبردار تھا اس کے خون کو رائیگاں نہیں جانے دیں گے۔

محسن نقوی کو خون میں نہلانے والے بزدل دہشت گرد آج بھی محسن کے مرنے کی خبر کو ترس رہے ہیں ۔

سْکوتِ شامِ غریباں میں سْن سکو تو سْنو
کہ مَقتلوں سے ابھی تک صَدائیں آتی ہیں
لہْو سے جِن کو منوّر کرے دماغِ بَشر
ہوائیں ایسے چَراغوں سے خَوف کھاتی ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.