عالمی ادارے کشمیریوں کی فریاد سنیں ، اقوام متحدہ کشمیریوں پر کیمیاوی ہتھیاروں کے استعمال پر ایکشن لے ، آغا حامد موسوی 

ولایت نیوز شیئر کریں

اقوام متحدہ طاقتور ملکوں کے مفادات کی پاسبانی کررہی ہے امن قائم کرنے کیلئے بنایا گیا ادارہ جنگون اور بدامنی کو فروغ دے رہا ہے

ویٹو پاور نے یو این کی ساکھ کو بری طرح مجروح کررکھاہے، بھارت پر جنگی جرائم کا مقدمہ چلایا جائے کشمیریوں کو استصواب رائے کا حق دیا جائے

بدترین ظلم کے باوجود کے باوجودبھارت پاکستان کی محبت کشمیریوں کے دلوں سے نہیں نکال سکا کشمیر کا ذرہ ذرہ آزادی و حریت کیلئے پکار رہا ہے

حضرت سکینہؑ کی چار سالہ زندگی محبت خداوندی ، عشق نبوی ؐ ،قربانی و ایثار ،اسلامی وانسانی قدروں کی سربلندی سے عبارت ہے، مجلس سے خطاب

اسلام آباد ( ولایت نیوز)سپریم شیعہ علماء بورڈ کے سرپرست اعلیٰ و تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے سربراہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا ہے کہ عالمی ادارے کشمیریوں کی فریاد سنیں ، اقوام متحدہ کشمیریوں پر کیمیاوی ہتھیاروں کے استعمال پر ایکشن لے ، اقوام متحدہ طاقتور ملکوں کے مفادات کی پاسبانی کررہی ہے جو ادارہ امن قائم کرنے کیلئے بنایا گیا تھا وہ جنگون اور بدامنی کو فروغ دے رہا ہے مستقل ارکان کی ویٹو پاور نے سلامتی کونسل کی ساکھ کو بری طرح مجروح کررکھاہے، بھارت پر جنگی جرائم کا مقدمہ چلایا جائے کشمیریوں کو استصواب رائے کا حق دیا جائے، بدترین ظلم کے باوجود کے باوجود بھارت پاکستان کی محبت کشمیریوں کے دلوں سے نہیں نکال سکا کشمیر کا ذرہ ذرہ آزادی و حریت کیلئے پکار رہا ہے، حضرت سکینہ بنت الحسین ؑ کی پردرد زندگانی اور زندان میں شہادت نے یزیدیت و ملوکیت کی سفاکیت کو بے نقاب کردیا شہیدہ زنداں حضرت سکینہؑ کی چار سالہ زندگی محبت خداوندی ، عشق نبوی ؐ ،قربانی و ایثار ،اسلامی تعلیمات کی پاسداری اورانسانی قدروں کی سربلندی سے عبارت ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے عشرہ اسیران کربلا کی مناسبت سے مجلس سکینہ بنت الحسین ؑ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ دوسری جنگ عظیم کے بعد 51ممالک نے اقوام متحدہ کے قیام کا اعلان کیا جس کے بنیادی چارٹر میں بین الاقوامی جھگڑوں کا پرامن حل ، رکن ممالک کے باہمی تعلقات ہم آہنگی یکجہتی ، انسانیت کو درپیش مسائل سے نمٹنا، کمزور ریاستوں کو طاقتور ریاستوں کے ظلم و وبربریت سے محفوظ رکھناتھا اس وقت اقوام متحدہ کے ارکان کی تعداد 193 سے تجاوز کرچکی ہے اور فلسطین مبصر ہے ، اس ادارے کی ہیئت ہی اپنے چارٹر کی نفی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ بھارت خود مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ میں لے کر گیا تھا جس پر اقوام متحدہ نے کشمیریوں کے استصواب رائے کے حق میں متعدد قرار دادیں پاس کیں لیکن بھارت نے آج تک ان قرار دادوں پر عمل کے بجائے ان کی راہ میں روڑے اٹکائے اور مسئلہ کشمیر سے توجہ ہتانے کیلئے پاکستان پر جنگیں مسلط کیں ۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ بھارت آج بھی اپنے مکروہ مفادات کی خاطر پینترے بدلتا رہتا ہے ایک طرف سب سے بڑے جمہوری ملک ہونے کا دعویدار ہے جب کہ مذہب کے نام پر اقلیتوں کے جینے کا حق چھین رکھاہے اور وہ اذیت ناک زندگی بسر کررہے ہیں یہی حال جموں و کشمیر میں بسنے والے مسلمانوں کا ہے بھارتی حکمران 70سال سے ہر ظلم کشمیریوں پر ڈھاتے چلے آرہے ہیں انہیں پاکستان سے محبت کی سزا دی جار ہی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ 8لاکھ سے زائد فوج نہتے کشمیریوں پر استعمال کی جارہی ہے ، اس بھارتی حکمران بوکھلاہٹ کا شکار ہیں اور کشمیری مجاہدین کا سامنا کرنے سے خوفزدہ ہیں اب نوبت بہ ایں جا رسید کہ بھارتی حکومت نے اپنے سورماؤں کو حریت پسندوں کا مقابلہ کرنے کیلئے کیمیاوی ہتھیاروں سے مسلح کردیا ہے ، کشمیر میڈیاسروس کے مطابق بھارت نے کشمیر میں درندگی کی انتہا کردی ہے۔

آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہا کہ کشمیر میں اسرائیل کی خفیہ ایجنسی موساد کی مدد سے دھڑا دھڑ کیمیاوی ہتھیار استعمال کئے جارہے ہیں جس سے دنیا کو معلوم ہو جانا چاہئے کہ بھارت جو ہر وقت پاکستان کے خلاف ہرزہ سرائی کرتا ہے دراصل دنیائے دہشت گردی کا سرغنہ ملک ہے پولیس وہاں مرچ گیس گولے استعمال کررہی ہے یہ گیس انسانی جسم پر انتہائی منفی اثرات چھوڑتی ہے ، بھارتی فوج ایسے ہتھیار بھی استعمال کررہی ہے جس سے انسان کا جسم ہڈیوں سمیت جل کر ناقابل شناخت ہو جاتا ہے ۔

انہوں مطالبہ کیا کہ اقوام متحدہ کشمیر کے مسئلے کی طرف فوری توجہ دے تمام بین الاقوامی قوتوں ادارون سے پرزور مطالبہ ہے کہ بھارتی فورسز کے ہاتھوں کیمیاوی ہتھیاروں کے استعمال کی تحقیقات کر وائیں جموں و کشمیر میں بسنے والے مسلمانوں کو تحفظ فراہم کیا جائے ،اقوام متحدہ اور دیگر تمام انسانی حقوق کے اداروں کو کشمیریوں کے بنیادی حق کیلئے عملی اقدامات کرنا ہوں گے ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.