زائرین شدید مشکلات سے دوچار ہیں عراق و ایران کی سفارتیں زائرین اربعین کیلئے جلد ویزے جاری کریں ، تحریک نفاذ فقہ جعفریہ 

ولایت نیوز شیئر کریں

حکومت پاکستان ایران عراق کی حکومتوں کے ساتھ ملکر زائرین امام حسین ؑ کی مشکلات کم کر نے کیلئے جامع پلان بنائے

بذریعہ سڑک جانے والے زائرین کی کوئٹہ اور تفتان میں شدید صعوبتوں کا سامنا ہے

زائرین کو مافیاؤں سے نجات دلائی جائے ۔ میجر(ر)باقربخاری کاہنگامی اجلاس سے خطاب

اسلام آباد( ولایت نیوز) تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے جوائنٹ سیکرٹری میجر (ر) باقر بخاری نے کہا ہے کہ اربعین حسینی ؑ میں شرکت کے خواہشمند زائرین شدید مشکلات سے دوچار ہیں عراق اور ایران کی سفارتیں زائرین اربعین کیلئے جلد ویزے جاری کریں ، حکومت پاکستان ایران عراق کی حکومتوں کے ساتھ مل کر زائرین امام حسین ؑ کی مشکلات کم کر نے کیلئے جامع پلان بنائے۔

انہوں نے مزید کہا کہ نواسہ رسول ؐ کے زائرین کیلئے آسانیاں پیدا کی جائیں بذریعہ سڑک جانے والے زائرین کی کوئٹہ سے روانگی اور تفتان سے واپسی کے وقت شدید صعوبتوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے زائرین کو حکومتی اور غیر حکومتی مافیاؤں سے نجات دلائی جائے ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ٹی این ایف جے عزاداری سیل کے ہنگامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا جس میں اربعین حسینی ؑ میں شرکت کیلئے جانے والے عزاداروں کو درپیش مسائل کا جائزہ لیا گیا۔

میجر (ر) باقر بخاری نے کہا کہ اربعین امام حسین ؑ حج بیت اللہ کی طرح عالم اسلام کی وحدت کا مظہر ہوتا ہے جس میں دنیا بھر سے زائرین شرکت کرکے جہاں عشق رسالت ؐ کا ثبوت دیتے ہیں وہاں جذبہ شہادت و حریت و آزادی و انسانیت کا لازوال درس بھی پاتے ہیں لہذا دوسرے ملکوں کی طرح وطن عزیزپاکستان کے اہل ایمان بلا تفریق مسلک اربعین امام امام حسین ؑ کے موقع پر زیارت سے شرفیاب ہونا سعادت سمجھتے ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ حکومت کی عدم دلچسپی کے سبب پاکستان کے زائرین کو زیارات پر روانگی اور ایران عراق پہنچنے پر بھی شدید مشکلات کا سامنا رہتا ہے معمولی باتوں پر زائرین لاکھوں کے جرمانوں کا شکار ہو جاتے ہیں ، وزارت خارجہ پاکستانی زائرین کی مشکلات کا ازالہ کرنے کیلئے اپنا کاردار ادا کرے ۔

میجر باقر بخاری نے کہا کہ داعش جیسے عفریت کے مقابلے کے دنوں میں بھی لاکھوں پاکستانی زائرین نے عراق کے عاشورہ اور اربعین کے اجتماعات میں شرکت کرکے جہاں عشق حسینی ؑ کا ثبوت دیا وہاں دہشت گردوں کا پھیلایا خوف و ہراس ختم کرنے میں نمایاں کردار ادا کیا، لیکن دن بدن پاکستانی زائرین پرنت نئی شرائط عائد کی جارہی ہیں اور پاکستانی حکومت خاموش تماشائی کا کردار ادا کررہی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ زائرین کیلئے آسانیاں پیدا کرنا حکومت پاکستان کا دینی ،اخلاقی اور آئینی فریضہ ہے ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.