لبیک یا بقیع : سرگودھا میں ماتمی احتجاجی ریلی

سرگودھا( رپورٹ : اکمل حسین جعفری )قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی کے اعلان کے مطابق بدھ کو عالمگیر انہدام جنت البقیع کے موقع پر ٰتحریک نفاذ فقہ جعفریہ ریجنل کونسل سرگودھا کی جانب سے پریس کلب سے پر امن احتجاجی ریلی نکالی گئی، جس کی قیادت ٹی این ایف جے پنجاب کے رہنما علامہ سید ثقلین بخاری، غضنفر عباس، علامہ انص اعجاز بلوچ، شفقت ترابی، اکمل حسین جعفری، سید مسعود ترمذی اور دیگر رہنما کر رہے تھے۔

مظاہرین نے قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی کی تصاویر، مختلف بینر اور پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے، جن پر جنت البقیع کی از سر نو تعمیر کےلئے مطالبات درج تھے، ریلی نے حسین چوک پہنچ کر جلسہ کی شکل اختیار کر لی، جہاں شرکاءسے خطاب کرتے ہوئے علامہ سید ثقلین بخاری نے کہا کہ اگر امت مسلمہ جنت البقیع اور جنت المعلیٰ کی مسماری کا راستہ روک لیتی تو کسی کو بیت المقدس کو آگ لگانے کی جرا¿ت نہ ہوتی۔ انہوں نے کہا کہ 8 شوال کا اہتجاج کسی ذات یا جماعت کےخلاف نہیں بلکہ عظیم اسلامی اور انسانیت کے ورثے کے تحفظ کےلئے ہے۔ انہوں نے کہا کہ بزرگان دین کی عزت و حرمت ان کی زندگی میں واجب ہے، اسی طرح بعد از حیات انکے مقابر اور مزارات کی تعظیم بھی لازم ہے۔ اس موقع پر شرکائے مظاہرہ نے پر جوش نعروں کی گونج میں قرار داد متفقہ طور پر منظور کی، جس میں مسلم حکمرانوں پر زور دیا گیا کہ وہ جنت البقیع اور جنت المعلی کی از سر نو تعمیر کےلئے برادر اسلامی ملک سعودی عرب پر سفارتی دباﺅ ڈالیں، قرار داد میں باور کرایا گیا کہ سفیر امن قائد ملت جعفریہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی کے اعلان پر لبیک کہتے ہوئے عالمگیر یوم انہدام جنت البقیع کے موقع پر تمام مکاتب فکر کا مشترکہ اور نمائندہ اجتماع اپنا پر امن احتجاج ریکارڈ کراتے ہوئے حکومت پاکستان سے مطالبہ کرتا ہے کہ وہ سعودی عرب پر سفارتی سطح پر دباﺅ ڈالے کہ وہ مزارات مقدسہ کی عظمت رفتہ کو فوری بحال کرے کیونکہ مشاہیر اسلام کے آثار اسلام کی شان و شوکت کے وہ مراکز ہیں، جہاں سے دنیا بھر کو درس ہدایت ملتا ہے، قرار داد میں اقوام متحدہ سمیت تمام اداروں پر زور دیا گیا کہ وہ جنت البقیع اور جنت المعلیٰ کے تاریخی اسلامی آثار کی عزت رفتہ کی بحالی کےلئے فوری عملی اقدامات کریں، ریلی سے علامہ غلام عباس کاظمی، انصر اعجاز بلوچ، شفقت ترابی، اکمل حسین جعفری نے خطاب کیا، بعد ازاں جلوس کے شرکاءپر جوش نعرے لگاتے ہوئے پر امن طور پر منتشر ہو گئے، ماتمی سنگتیں دعائے علی اکبر، شہزادہ علی اکبر نے بھی شرکت کی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


Notice: ob_end_flush(): failed to send buffer of zlib output compression (1) in D:\hshome\automotonk\walayat.net\wp-includes\functions.php on line 3728

Notice: ob_end_flush(): failed to send buffer of zlib output compression (1) in D:\hshome\automotonk\walayat.net\wp-includes\functions.php on line 3728