یوم یکجہتی کشمیر :لاہور پنجاب اسمبلی کے سامنے تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کا مظاہرہ

ولایت نیوز شیئر کریں

تحریک آزادی کشمیر کی بھرپورحمایت کا عزم ,تحریک آزادی کشمیر کی کامیابی نوشتہ دیوار ہے جسے بھارتی جبر سے دبایا نہیں جا سکتا۔عمران حیدر نقوی

لاہور(ولایت نیوز )قائد ملت جعفریہ آغاسیدحامدعلی شاہ موسوی کے اعلان کے مطابق سوموار کویوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر ملک کے دیگر شہروں کی طرح صوبائی دارالحکومت لاہورسمیت صوبہ بھر میں کشمیریوں کی تحریک حریت و آزادی کے ساتھ اظہار یکجہتی کیلئے پرامن احتجاجی مظاہرے ہوئے اوریکجہتی کشمیر ریلیوں کا انعقاد کیا گیا۔تحریک نفاذفقہ جعفریہ لاہور کی یوم یکجہتی کشمیر کمیٹی کی جانب سے پنجاب اسمبلی کے سامنے ریلی کی قیادت ریجنل وضلعی قائدین سید عمران حیدر نقوی ، ذاکر گلفام حسین مہاجر، سید علی رضا کاظمی، سید میزان حیدر نقوی، سید کامران حیدر نقوی،سید علی جرار کاظمی، محمد علی، حسن رضا ، افتخار حسین اور دیگر عمائدین نے کی جبکہ آل پارٹیز حریت کانفرنس جموں کشمیر کے نمائندہ اور کشمیر سٹڈی سرکل کے ڈائریکٹر انجینئر مشتاق محمود نے بھی خصوصی شرکت کی ۔ مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے سید عمران حیدر نقوی نے کہا کہ شہیدوں کے خون سے رنگین تحریک آزادی کشمیر کی کامیابی نوشتہ دیوار ہے جسے دبانے میں بھارتی مظالم اور جبر استبداد بری طرح ناکام ہو چکے ہیں ۔ انہوں نے اس امر پرگہری تشویش کا اظہار کیا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کی انتہا کے باوجود اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کے عالمی ادارے کی مجرمانہ خاموشی شرکت جرم کے مترادف اور انسانی حقوق کے ڈھنڈورچیوں کی کار کردگی پر سوالیہ نشان ہے۔انہوں نے کہا مسئلہ کشمیر سے دنیا کی توجہ ہٹانے کیلئے دہشتگردی اور لائن آف کنٹرول پر اشتعال انگیزی کے ذریعے بھارتی جارحیت کا سلسلہ جاری ہے جو پاکستان پر مشرقی و مغربی دونوں اطراف سے حملہ آور ہے جبکہ اسکے ساتھ ساتھ پاکستان پر ہی الزام تراشی کر کے الٹا چور کوتوال کو ڈانٹے ک مصداق سازشوں میں مصروف ہے۔ انہوں نے کہا کہ عالمی برادری کا فرض ہے کہ وہ مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عملدرآمد کیلئے بھارت پر دباؤ ڈالیں اور اسے مجبور کریں کہ وہ کشمیریوں کی امنگوں کے سامنے سر جھکادے بصورتِ دیگر جنوبی ایشیاء میں امن کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہوسکتا۔انہوں نے کہاکہ کشمیر صرف اس خطے کا نہیں بلکہ پورے عالم اسلام کا مسئلہ ہے جس کے بغیر پاکستان نا مکمل ہے اسی لئے قائد اعظم نے کشمیر کو پاکستان کی شہ رگ قراردیا تھا ،مظلوموں کی حمایت ہماراآبائی شیوہ ہے لہذا مظلوم جہاں بھی ہے ہم اسکی حمایت کرتے ہیں اور ظالم جو بھی اور جہاں بھی ہے اس کی نہ صرف مذمت کرتے ہیں بلکہ اسکے خلاف آواز احتجاج بلند کرکے ظلم و بربریت کو کنڈم کرتے رہیں گے۔ ریلی سے خطاب کرتے ہوئے سید علی رضا کاظمی نے کہا کہ اپنے قیام کے بعد پاکستان30ستمبر 47ء کو عالمی ادارے اقوام متحدہ کا رکن بنا اور اسوقت سے لیکر آج تک اس ادارے کی فعالیت کیلئے بھر پو ر معاونت اور موثر کردار ادا کر تارہا ہے یہی وجہ ہے کہ اس ادارے کے مقاصداوراصول پاکستان کی خارجہ پالیسی کے اہم ستونوں میں سے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان نے ہمیشہ چاہا ہے کہ بین الاقوامی اور علاقائی تنازعات کو اقوام متحدہ کے اصولوں کے مطابق حل کیا جائے تا کہ عالمی سطح پر امن و آشتی کو فروغ حاصل ہو ،اس مقصد کیلئے پاکستان نے ہمیشہ اقوام متحدہ کی قراردادوں اور فیصلوں کا احترام اوراس ادارے کے پلیٹ فارم سے عالمی مسائل کو موثر انداز میں اجاگر کیا اور اپنا نقطہ نظر پیش کیا ہے یہاں تک کہ پاک فوج کے دستے اقوام متحدہ کی امن فوج میں شامل ہو کر نہ صرف مختلف ممالک میں امن عامہ قائم کرنے کیلئے امن مشن کے فرائض کی ادائیگی میں ہر اول دستے کا کام دیتے ر ہے ہیں جبکہ ان فرائض کی ادائیگی کے دوران جانیں تک قربان کر رہے ہیں لیکن تنازعہ کشمیر کے سلسلے میں اقوام متحدہ سے پاکستان کو سخت مایوسی ہوئی ۔انہوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر 48ء سے اقوام متحدہ کی میز پر ہے جس کے حل کیلئے سلامتی کونسل کی قراردادیں بھی منظور کی گئیں جن پر آج تک عمل نہیں کرایا جا سکا جس سے اس عالمی ادارے کا دوہرا معیا ر ظاہر ہوتا ہے کیونکہ مشرقی تیمور اور جنوبی سوڈان کو تو آزاد کرا دیا گیالیکن کشمیریوں پر عرصہ حیات تنگ ہے جو سات دہائیوں سے قربانیاں دے رہے ہیں ،لہذا اگر اقوام متحدہ اپنی عزت اور ساکھ بحال کرنا چاہتا ہے تو مسئلہ کشمیر کے بارے میں اپنی قراردادوں پر فی الفور عملدارآمد کروائے تاکہ جنوبی ایشیاء میں امن کا سورج طلوع ہو ۔اس موقع پرشہدائے کشمیرکی بلندی درجات ،تحریک آزاد ی کشمیر اورافواجِ پاکستان کے ضرب عضب آپریشن کی کامیابی کیلئے خصوصی دعائیں مانگی گئیں۔ مظاہرے سے ذاکر گلفام حسین مہاجر، سید میزان حیدر نقوی ، سید کامران حیدر نقوی اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


Notice: ob_end_flush(): failed to send buffer of zlib output compression (1) in D:\hshome\automotonk\walayat.net\wp-includes\functions.php on line 3729

Notice: ob_end_flush(): failed to send buffer of zlib output compression (1) in D:\hshome\automotonk\walayat.net\wp-includes\functions.php on line 3729