کربلائے معلی

روسی و عراقی ائر فورس نے کربلا و نجف پر حملے کا منصوبہ ناکام بنا دیا

ولایت نیوز شیئر کریں

بغداد ( ولایت مانیٹرنگ ڈیسک )عراقی انٹیلی جنس کے عہدیداران نے انکشاف کیا ہے کہ دو ہفتہ قبل عراقی فضائیہ نے عراق میں القائم کے قصبے اور روسی ایئر فورس نے شامی شہر المیادین اور اس کے قریبی علاقوں میں ’اسلامک اسٹیٹ‘ کے خود کش حملہ آوروں کے ان دو اجتماعات کو نشانہ بنایا تھا، جو مقدس ترین اسلامی مقامات نجف اشرف اور کربلائے معلی کو خوفناک تباہی سے دوچار کرنے کیلئے خود کش مشن پر روانہ ہونے والے تھے ۔

دارالحکومت بغداد سے اتوار تیس جولائی کو ملنے والی نیوز ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس کی رپورٹوں کے مطابق  داعش نے منصوبہ بنایا تھا کہ وہ مسلسل ناکامی کی خجالت دور کرنے کیلئے  عالم اسلام کے لیے انتہائی مقدس مقامات کو اپنے حملوں کا نشانہ بنائے گی۔

عراقی انٹیلیجنس کے ان دونوں اعلیٰ اہلکاروں نے اپنے نام خفیہ رکھے جانے کی شرط پر ایسوسی ایٹڈ پریس کو بتایا، ’’داعش کربلا اور نجف میں انتہائی مقدس اسلامی مزارات اور عراقی شیعہ مذہبی رہنما آیت اللہ عظمیٰ علی السیستانی کے گھر پر یکے بعد دیگرے خود کش حملے کرنا چاہتی تھی۔‘‘

ان دونوں عراقی اہلکاروں نے اس منصوبے کی ناکامی کا ذکر کرتے ہوئے عراقی فضائیہ اور روسی ایئر فورس کے تقریباﹰ بیک وقت کیے جانے والے ان بڑے فضائی حملوں کا حوالہ دیا، جو دو ہفتے قبل کیے گئے تھے۔

ان انٹیلیجنس افسران نے ان دونوں فضائی کارروائیوں میں مارے جانے والے داعش کے جہادیوں کی تعداد کے بارے میں کچھ بھی بتانے سے انکار کر دیا۔ عراق میں القائم کا قصبہ اور شام میں المیادین کا شہر دونوں ’اسلامک اسٹیٹ‘ کے شدت پسندوں کے کنٹرول میں ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


Notice: ob_end_flush(): failed to send buffer of zlib output compression (1) in D:\hshome\automotonk\walayat.net\wp-includes\functions.php on line 3721

Notice: ob_end_flush(): failed to send buffer of zlib output compression (1) in D:\hshome\automotonk\walayat.net\wp-includes\functions.php on line 3721